Lahore Board Online Roll No Slips HSSC-II Exam 2014 - InnerForum
Home / Education / Exam News / Lahore Board Online Roll No Slips HSSC-II Exam 2014

Lahore Board Online Roll No Slips HSSC-II Exam 2014

Lahore Board Online Roll No Slips HSSC-II Exam 2014

Lahore Board Online Roll No Slips HSSC-II Exam 2014 announced. BISE Lahore Board Online Roll No Slips Inter Part 2 12th Class HSSC-II Exam 2014 announced.

BISE Lahore Inter Date Sheet Annual 2014 to start in the month of March. BISE Lahore Inter Date Sheet Annual 2014 going to be held in the first week of march. The Date sheet will be available as soon as it will be announced.

After long time the Student should break their patience and its time to get the BISE Lahore Inter Supply Result 2013. After completion of the Inter Supply Exam its time for BISE Lahore Inter Supply Result 2013.

Emergence of Pakistan on the map of the world, the examinations pertaining to the Interulation and Intermediate level were conducted under the aegis of University of the Punjab. However, through the promulgation of the Punjab University Act (Amendment) Ordinance 1954, the Board of Secondary Education, Punjab was established in the province which took from the said University control of examinations of Secondary, Intermediate and Pakistani & Classical Languages. The first-ever examination for these stages was conducted in the year 1955.\

Increase in the candidature, two more Boards were established at Multan and Sargodha under West Pakistan Boards of Intermediate and Secondary Education (Multan & Sargodha) Ordinance No.XVII of 1968. As a result of further bifurcation, Boards were also established at Rawalpindi and Gujranwala. The re-construction of the Board of Intermediate & Secondary Education, Lahore has been done through the Punjab Boards of Intermediate & Secondary Education Act 1976 (lately amended by Punjab Ordinance No.XLVII), and presently in the administrative setup of the province, eight Boards are functioning at division level.

Lahore Board Online Roll No Slips HSSC-II Exam 2014

 

comments

About Shehzaib Ejaz

Asalam o alaikum Dear users, we welcome your comments and positive feed back plz comment on this page so we can improve the website for you people. Mail Us @ [email protected]

Check Also

Karachi Board HSSC Pre Engineering Date Sheet 2015

Roll Number Slip MA MSC Exam Balochistan University 2015

Roll Number Slip MA MSC Exam Balochistan University 2015 Roll Number Slip MA MSC Exam …

4 comments

  1. یہ ظلم کی انتہا ہے کہ ریگولر امیدوار آن لائن رول نمبر سلب سے محروم ھیں۔
    بورڈ والوں نے کالجوں پر رول نمبر سلپ کی ذمہ داری تو ڈال دی ہے لیکن بدقسمتی سے بہت سے کالجوں میں سرے سے کمپیوٹر ھے ھی نہیں اور جہاں ھے وھاں کمپیوٹر چلانے والا غائب ھے یا کمپیوٹر خراب ھے یا انٹرنیٹ نہیں آ رھا۔ آگے جب گرمیوں کی چھٹیاں ھونی ھیں تو کالج سٹاف نے بھی غائب ھو جانا ھے۔
    میرا کزن گورنمنٹ ڈگری کالج قصور میں پڑھتا ہے۔ انگلش کے پیپر کے بعد واپسی پر ایکسیڈنٹ میں اس کی رول نمبر سلپ گم ہو گئی۔ کالج رابطہ کیا لیکن وھاں کلرک صاحب تین دن کی چھٹی پر تھے۔ زخمی حالت میں بیچارہ بھاگم بھاگ قصور سے یہاں لاھور بورڈ آفس پہنچا۔ جواب ملا کہ ٹائم ختم ھو چکا ھے لہذا کل آنا۔ اگلے دن صبح پہنچا تو کہا گیا کہ کالج کارڈ نہیں بلکہ اپنے ابا کا شناختی کارڈ لاؤ۔ بے چارہ زخمی حالت میں پھر واپس قصور پہنچا۔ ابا جی تو ٹیکسلا میں نوکری کرتے ھیں۔ انھیں رابطہ کیا تو بتایا کہ شناختی کارڈ تو ان کے پاس ھے البتہ گھر میں فوٹو کاپی پڑی ھیں۔ احتیاطاً ان کی تصدیق کروا کے لے جاؤ۔ بے چارہ پھر واپس لاھور آیا تو جواب ملا کہ فوٹو کاپی قابل قبول نہیں ھے۔ اگلے دن سات مئی کو فزکس کا پیپر تھا لہذا واپس قصور پہنچا کہ شائد منت سماجت کر کے امتحانی مرکز میں داخل ہو کر پیپر دے سکے۔ لیکن ظالموں نے صاف کہہ دیا کہ رول نمبر سلپ کے بغیر پیپر نہیں دیا جا سکتا۔ بے چارے کا ایک پیپر ضائع ھو گیا صرف بورڈ والوں کی ھٹ دھرمی کی وجہ سے۔ ابا کو فون کروا کر شناختی کارڈ بذریعہ ٹی سی ایس منگوایا جس میں مزید ایک دن لگ گیا اور آج آٹھ مئی کو سفارشیں ڈلوا کر بورڈ آفس سے بالآخر رول نمبر سلپ مل گئی۔ خدا ان بورڈ والوں کے ظلم کو دیکھ رھا ھے۔ خدا ان ظالموں کو غارت کرے۔
    آپ سب بہن بھائیوں کو یہ نصحیت کرتی ھوں کہ فوراً سے پہلے اپنے رول نمبر سلپ کی فوٹو کاپی کروا لیں ورنہ ایسے ھی رسوا اور ذلیل ھونا پڑے گا کیونکہ بورڈ والے تو انسان کو انسان ھی نہیں سمجھتے۔

  2. very sad story….. Innerforum team is with you if you need any help from social media we are here for you

    Regards

    Webmaster Innerforum

  3. Thanks Innerforum

    اس حوالے سے کچھ مزید حقائق حاضر خدمت ھیں۔

    لاھور بورڈ کے مندرجہ ذیل نمبر معلومات کے حصول کے لیے ھیں :۔

    (0092) (42) 99200192-197

    یعنی یہ لاھور بورڈ کا ھیلپ ڈیسک ھے۔ مگر افسوس اس بات کا ھے کہ ان نمبر پر فون کیا جائے تو کوئی آپریٹر فون نہیں سنتا۔ میرا کزن قصور سے آنے سے پہلے ڈیڑھ گھنٹہ مسلسل ان نمبروں کو  آفس ٹائم کے دوران ٹرائی کرتا رھا تا کہ معلومات حاصل کر سکے کہ

    Duplicate Roll No Slip

    کے حصول کے لیے کون سے ڈٓاکومنٹس اپنے ھمراہ لاھور لائے لیکن افسوس کہ کسی نے فون نہیں سنا۔

     

    جب وہ لاھور بورڈ آفس پہنچا تو چار بج کر آٹھ منٹ ھوئے تھے لیکن اسے صاف جواب دے دیا گیا کہ ٹائم ختم ھو چکا ھے باوجود اس کے آفس ٹائم پانچ بجے تک ھوتا ھے۔ اسے کسی قسم کی معلومات بھی نہیں دی گئی کہ آیا اس کے ڈاکومنٹس پورے ھیں۔

     

    جب وہ دوسرے دن آیا تو بورڈ والوں نے صاف جواب دے دیا کہ اب ڈپلیکیٹ رول نمبر سلپ ایشو نہیں ھوتی۔ جاؤ جا کر اپنے کالج سے رابطہ کرو۔ حالانکہ یہ بات بالکل غلط تھی۔ اسے پریشان کھڑا دیکھ کر سامنے فوٹو سٹیٹ والی دکان سے کوئی رحم دل بندہ آیا اور اس نے موبائل پر بورڈ آفس کے اندر کسی بندے سے رابطہ کر کے میرے کزن کو اس کے پاس بھیج دیا۔ اس بندے نے میرے کزن کو کمرہ نمبر

    203

    میں بھیج دیا جہاں اسے بتایا گیا کالج کے پرنسپل کا اتھاارٹی لیٹر، کالج کارڈ کے ساتھ اپنے ابا کا بھی شناختی کارڈ لاؤ۔ اور ساتھ مبلغ ایک ھزار روبے بنام لاھور بورڈ کا بنک چالان برائے ڈپلیکیٹ رول نمبر سلپ جمع کراؤ اور رسید لے کر یہاں آؤ۔ اس نے منت سماجت کی کہ میں زخمی ھوں مجھے واپس قصور جانا پڑے گا ، ابو کے شناختی کارڈ کے بغیر کام کر دیں لیکن وہ نہ مانے۔ یہ بات قابل توجہ ھے کہ وھاں کچھ اور بھی بچے بچیاں رول نمبر سلپ کے مسئلے لے کر آئے ھوئے تھے اور تقریباً سب ھی کو کوئی نہ کوئی اعتراض لگایا جا رھا تھا صرف اس وجہ سے کہ آنے سے پہلے کسی کو بھی فون پر کوئی معلومات نہیں ملتی۔ وھی فوٹو سٹیٹ والے بندے نے بتایا کہ یہ لوگ فون نہیں سنتے اور آپس کی گپ شپ میں لگے رھتے ھیں۔

     

    جب دوبارہ شناختی کارڈ کی تصدیق شدہ کاپی لایا تو اس پر بھی اعتراض لگا دیا کہ یہ قابل قبول نہیں ھے۔ اصل لے کر آؤ۔ ھزار روپے کا چالان برائے ڈپلیکیٹ رول نمبر سلپ بھی بنک میں جمع کروا چکا تھا۔ بڑی منت سماجت کی کہ کل میرا فزکس کا پیپر ھے میں زخمی ھوں لیکن انھوں نے ذرا بھی رحم نہیں کھایا۔

     

    فزکس کا پیپر ضائع ھونے کے بعد میرا کزن انتہائی بد دل ھو چکا تھا ۔ ۔ ۔ اتنا بد دل کہ اس کا دل کر رھا تھا کہ وہ بورڈ آفس کی بلڈنگ کو خودکش دھماکے میں اڑا دے ۔ ۔ ۔  بہرحال بورڈ آفس پہنچا ۔ ۔ ۔ وھی فوٹو سٹیٹ والے بندے کو سارا حال بتایا ۔ ۔ ۔  اس نے کسی ایجنٹ سے رابطہ کیا جو تھوڑی دیر میں وھاں آ گیا اور میرے کزن سے ڈھائی سو روپے لیے اور کام ھونے کی گارنٹی دی۔ پھر اس نے کسی بندے سے فون پر بات کی اور میرے کزن کو اوپر کمپیوٹر سیکشن میں وقاص نام کے بندے کے پاس بھیج دیا۔ اس نے اپنے طور پر سارے ڈاکومنٹس کی تصدیق کی اور بتایا کہ سٹوڈنٹس کالجوں کے واجبات ادا کیے بغیر رول نمبر سلپ انٹرنیٹ سے نکلوا لیتے تھے اس لیے کالجوں کے اصرار پر ریگولر امیدواروں کو کالج سے ھی رول نمبر سلپ ملے گی ۔ میرے کزن نے کہا کہ اب تو کافی پیپر گزر گئے ھیں اب تو ریگولر کی آن لائن رول نمبر سلپ کھول دیں کیونکہ جس مشکل سے میں گزرا ھوں کوئی اور بھی گزر سکتا ھے تو وقاص صاحب نے کہا کہ آپ چیئرمین صاحب کو یہ بات سمجھائیں کہ نیچے جو رش لگا ھوا ھے اس کی وجہ یہ ھے۔ چیئرمین صاحب کا یہ نمبر ھے :۔

    99200101 , 99200102

    خیر پندرہ بیس منٹ میں رول نمبر سلپ مل گئی۔ وقاص صاحب نے بتایا کہ اس کے چارجز تو صرف ڈیڑھ سو روپے ھیں، ایک ھزار روپے کا بینک چالان کیوں جمع کروا دیا ھے؟ بہرحال ڈیڑھ سو روپے ادھر بھی دیے۔ اسی سے اندازہ لگائیں کہ بورڈ کے عملہ تک کو معلومات نہیں کہ کس مسئلہ کی کتی فیس ھے اور وہ کھلے عام لاعلمی میں یا جان بوجھ کر بورڈ کا ریونیو بڑھا رھے ھیں۔ مجھے تو حیرت اس بات پر ھے کہ جب میں نے چیئرمین صاحب کو اپنا احتجاج ریکارڈ کروانے کے لیے فون کیا تو ان کے اسسٹنٹ نے بھی مجھے ڈپلیکیٹ رول نمبر سلپ کی ایک ھزار روپے ھی فیس بتائی۔

     

    جب میرا کزن یہاں لاھور میں ھمارے گھر اپنی رول نمبر سلپ کا معرکہ مار کر کامیاب لوٹا اور ھمیں بتایا کہ مبلغ دو ھزار روبے کے قریب اس کا خرچہ ھو چکا ھے جس میں قصور سے لاھور اور لاھور سے قصور کے چکر، بورڈ فیس، ایجنٹ کے ڈھائی سو روپے وغیرہ وغیرہ تو ھم نے اسے کہا کہ اگر تمھارا کالج کلرک سے رابطہ ھو جاتا اور اسے تم اتنے پیسوں کی آفر کر دیتے تو وہ اپنی چھٹی کینسل کر کے کالج آ جاتا اور تمھاری رول نمبر سلپ باعزت و احترام تمھارے گھر دے کر جاتا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.